جرمن پولیس” ہم یونان سے آنے والے مسافروں کو تنگ نہیں کرتے۔

جرمن کے شہر پوٹس ڈام میں پولیس کے ہیڈکوارٹر سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ ہم یونان سے جرمن آنے والے مسافروں کو تنگ نہیں کرتے بلکہ یہ ایک حفاظتی اقدام ہے جس کے تحت ہم آنے والے مسافروں سے چند سوالات کرتے ہیں اور ان کے کاغذات کی جانچ پڑتال کی جاتی ہے۔

پولیس کے سربراہ کا مزید کہنا تھا کہ یہ اسی طرح کی چیکنگ ہے جس طرح پولیس ڈرائیوروں کے الکوحل ٹیسٹ لیتی ہے۔اگر ان نتائج پر غور کیا جائے تو 95 الکوحل ٹیسٹ نیگیٹو آتے ہیں۔لیکن اس کا یہ مطلب ہرگز نہیں کہ جن لوگوں کا ٹیسٹ کیا جاتا ہے انہیں تنگ کرنا مقصد ہوتا ہے۔

پولیس کے سربراہ کا مزید کہنا تھا کہ ہم یونان کے ایئر پورٹس پر چیکنگ پر یقین رکھتے ہیں اور اسی وجہ سے اب جرمن کے ایئر پورٹس پر برائے نام چیکنگ کی جاتی ہے۔

چیکنگ کا مقصد خاص طور پر ایسے لوگوں کی آمد کو روکنا ہے جو جعلی کاغذات پر یونان سے جرمن آنے کی کوشش کرتے ہیں۔اور وہ بھی اب زیادہ چیکینگ یونان کے ائیرپورٹس سے کی جاتی ہے ۔

اس سے پہلے یونان کے لوگوں کو شکایت تھی کہ جب وہ جرمن کے ایئرپورٹس پر اترتے ہیں تو ان سے طرح طرح کے سوالات کیے جاتے ہیں جن میں یہ سوالات شامل ہیں

کے آپ کہاں رہو گے؟

آپ کے پاس یہاں رہنے کے لئے پیسے کتنے ہیں؟

آپ اکیلے کیوں سفر کر رہے ہیں اور آپ کی بیوی آپ کے ساتھ کیوں نہیں ہے۔؟وغیرہ وغیرہ

پولیس کے سربراہ کا مزید کہنا تھا کہ مئی 2018 سے اب جرمن کے ایرہوٹس پر اتنی سخت چیکنگ نہیں کی جاتی۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com