قتل ہونے والی چھ سالہ بچی کی لاش جھیل سے مل گئی۔

سیریل کلر کے ہاتھوں قتل ہونے والی چھ سالہ بچی کی لاش” کسیلیا تو “کے علاقے میں واقع میمی جھیل سے مل گئی۔

کچھ عرصہ پہلے چھے سالہ بچی کو بے دردی سے قتل کردیا گیا تھا اور بچی کی لاش کو تلاش کرنے کے باوجود ڈھونڈا نہیں جا سکا تھا لیکن اب کچھ غیر ملکی تنظیموں کی مدد سے بچے کی لاش جھیل سے مل گئی۔

لاش کو جھیل سے نکال کر ورثہ کے حوالے کر دیا گیا ورثہ میں سیریل کلرز کے بارے میں غصہ اور نفرت پائی جاتی ہے اور حکومت سے اپیل کی گئی ہے کہ انہیں قرار واقعی سزا دی جائے۔

قاتل کا نام نیکوس میںتکساس بتایا جاتا ہے اور یہ واقعہ سائپرس کے علاقے سپریوٹ میں پیش آیا۔ کچھ عرصہ پہلے تک حکام اس سوچ رہے تھے کہ جھیل کے پانی کو نکال دیا جائے اور اس طریقے سے بچی کی لاش کو ڈھونڈا جا سکے لیکن اب بچے کی لاش ملنے کے بعد جھیل کو خالی کرنے کی ضرورت نہیں رہی ہے ۔

واضح رہےکہ نیکو س میںتکساس نے سات لوگوں کو قتل کیا تھا جن میں ایک بچی اور چھ دوسرے افراد شامل تھے۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com