غیر قانونی مہاجرین کو تھیسالونیکی لاتے ہوئے ایک غیر ملکی گرفتار بارہ غیر قانونی مہاجرین کار سے گرفتار کر لئے گئے۔

پولیس کے مطابق مشہور زمانہ اگناتیا روڈ پر” جورجیا “سے تعلق رکھنے والے ڈرائیور کو روکا گیا لیکن ڈرائیور نے رکنے کے بجائے کار کی سپیڈ بڑھا دی جس پر پولیس نے پیچھا کرتے ہوئے ڈرائیور سمیت بارہ غیر قانونی مہاجرین کو گرفتار کر لیا۔

گرفتار ہونے والے غیر قانونی مہاجرین میں بنگلہ دیش انڈیا اور پاکستان کے مہاجرین شامل تھے۔

ڈرائیور نے ان غیر قانونی مہاجرین کو ترکی اور یونان کے بارڈر سے گاڑی میں بٹھایا اور تھیسالونیکی لے کر جا رہا تھا جب راستے میں پولیس نے ان کو گرفتار کر لیا۔

غیر قانونی مہاجرین نے پولیس کو مزید بتاتے ہوئے کہا کہ ترکی سے یونان میں داخل ہونے کے لیے 12 سو یورو ادا کیے جاتے ہیں جن کے عوض ایجنٹ ان کو بارڈر سے یونان کے شہر تھیسالونیکی میں پہنچا دیتے ہیں۔

واضح رہے کہ بارڈر سے تھیسالونیکی پہنچانے کے لیے ایجنٹ زیادہ تر اگناتیا روڈ کو ہی استعمال کرتے ہیں اور پچھلے کچھ مہینوں سے بہت سے ایجنٹ غیر قانونی مہاجرین کو تھیسالونیکی منتقل کرنے کی کوشش میں گرفتار کیے جا چکے ہیں۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com