موریا کیمپ میں قتل کرنے والے دو افراد کو گرفتار کر لیا گیا۔

ذرائع کے مطابق دو افراد کی عمریں بالترتیب 19 اور 29 سال ہیں جنہیں کیمپ کے پاس سے گرفتار کیا گیا۔

یہ دونوں افراد 12 دسمبر کو قتل ہونے والے افغانی باشندے کے قتل میں ملوث ہیں۔

جب ان سے پوچھ گچھ کی گئی تو ان میں سے ایک کا کہنا تھا کہ قتل اس لیے کیا گیا کہ مقتول نے اس کی بیوی کو ہراساں کیا تھا اور اپنی عزت کی خاطر ہم نے افغان باشندے کو قتل کر دیا۔

گرفتار ہونے والے دونوں افراد کو اگلے ہفتے عدالت میں پیش کیا جائے گا جہاں وہ اپنا موقف دوبارہ سے بیان کر سکیں گے اگر ان پر قتل ثابت ہو گیا تو عمر قید کی سزا ہو سکتی ہے۔جس کے بہت زیادہ امکانات ہیں کیوں کہ گرفتار ہونے والے دونوں افراد قتل میں ملوث ہونے کا اعتراف کر چکے ہیں۔

واضح رہے کہ 12 دسمبر کو افغانی باشندے کو بڑی بےدردی سے موریا کیمپ کے قریب قتل کر دیا گیا تھا۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com