یونان روس اور یورپ کے درمیان پل کا کام کرسکتا ہے: چپراس۔

وزیر اعظم الیکسِس چپراس کا کہنا ہے کہ یونان روس اور یورپ کے درمیان پل کا کام کرسکتا ہے یہ بات الیکسس چپراس نے روس کے دورے پر صدر ولادیمیر پیوٹن سے ملاقات کے بعد پریس کانفرنس میں کہی۔

الیکسس چپراس کا مزید کہنا تھا کہ یونان اور روس کے تعلقات 190 سال پر محیط ہیں جنہیں کمزور نہیں کیا جا سکتا یونان روس اور نیٹو کے درمیان تحفظات کو دور کرنے کی بھی کوشش کرے گا۔

واضح رہے کہ مقدونیہ کے معاملے پر پچھلے کچھ عرصے سے یونان اور روس کے درمیان چپقلش چلی آ رہی تھی جس کے بارے میں بات کرتے ہوئے ولادیمیر پیوٹن نے کہا کہ وہ اب ماضی کا حصہ بن چکا ہے اور دونوں ممالک اپنے دیرینہ تعلقات کو قائم رکھنا چاہتے ہیں۔ا س سلسلے میں الیکسس چپراس کا روس کا دورہ برف پگھلانے کا کام کرے گا۔

یونان اور روس کے درمیان ہرسال 3.2 بلین یورو کی تجارت ہوتی ہے دونوں راہنماؤں نے اس بات کا اعادہ کیا کہ باہمی تجارت میں اضافہ کی کوششیں تیز کی جائیں گی۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com