آسٹریا نے سیاسی پناہ دینے سے انکار کردیا۔

تفصیلات کے مطابق 10 اور 11 دسمبر کو اقوام متحدہ کی جانب سے منعقد کی جانے والی کانفرنس میں شرکت سے انکار کرتے ہوئے آسٹریا کے ڈپٹی چانسلر کرسچن سٹراخ” نے کہا کہ ہم آسٹریا میں رہتے ہیں اور ہمیں یہ حق پہنچتا ہے کہ ہم جسے چاہیں آسٹریا میں آنے کی اجازت دیں اور جسے چاہیں اسے آسٹریا میں آنے سے روک دیں۔

اقوام متحدہ کے تعاون سے ہونے والی اس کانفرنس میں سیاسی پناہ گزینوں کے معاملے کو حل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ اور اس میں ہنگری اور آسٹریا کے علاوہ یورپ کے تقریبا تمام ممالک حصہ لے رہے ہیں یہ کانفرنس ماروکو” میں 10 اور 11 دسمبر کو ہوگی۔

آسٹریا کے چانسلر سباسچئن کرٹس” نے مزید کہا کہ قانونی اور غیر قانونی پناہ گزینوں میں فرق کیا جانا چاہیے اگر اب یہ فرق قائم نہ کیا گیا تو یہ پوری دنیا کے لئے مسئلہ بن جائے گا۔

واضح رہے کہ امریکا نے پہلے ہی اس طرح کی کسی کانفرنس میں شرکت سے انکار کردیا ہے اور امریکہ کی جانب سے سیاسی پناہ گزینوں کو لینے سے گریز کیا جا رہا ہے۔

ان حالات میں اس کانفرنس کا مستقبل کیا ہوگا یہ تو کانفرنس کے انعقاد کے بعد ہی پتہ چل سکے گا۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com